پاکستان مائن ورکرز فیڈریشن کا اعلامیہ۔

پاکستان مائن ورکرز فیڈریشن کا اعلامیہ۔

پاکستان مائن ورکرز فیڈریشن کا اعلامیہ۔
28 جون 2020 سے 19جولائی 2020 کے دوران 22 دن میں بلوچستان میں 5، پنجاب میں 4، سندھ میں 1 اور خیبرپختونخوا میں 3 اس طرح کل 13 مائن ورکرز جانحق ہوئے۔ PMWF کانکنی کے ان حادثات پر نہایت تشویش کا اظہار کرتی ہیں۔ حادثات کے اسباب میں سیفٹی قوانین پر عملدرآمد نہ ہونا اور مائن ورکرز میں شعور و آگاہی اور ٹریننگ کا فقدان ہے۔ ان حادثات کی زمہ داری ہر تین فریقین انسپکٹریک آف ماہنز، مائن اونرز، مائن ورکرز اور ان کے نمائندگی کے دعویدار ٹریڈ یونینز اور فیڈریشنز ہیں۔ ان تینوں فریقین کا فرض ہے کہ وہ اپنے زمہ داریاں پوری کریں تاکہ انسانی جانوں کا ضیع روکا جاسکے۔ متعلقہ صوبائی حکومتوں کو چاہیے کہ ہر صوبے یا نیشنل لیول پر ایک سیفٹی اینڈ ھیلتھ پر سیمینار منعقد کرے جس میں مائن حادثات پر مباحثہ اور مذاکرہ کیا جا سکے اور متفقہ لائحہ عمل اختیار کیا جا سکے۔ سیفٹی اینڈ ھیلتھ کے ایشو پر کسی بھی فریق کا اختلاف نہیں ہے۔ عملی کردار اور قوانین پر عمل درآمد کی ضرورت ہے اور اپنی اپنی زمہ داری کو ادا کرنا ہے۔ PMWF مایننگ سیکٹر سے وابستہ تمام ٹریڈ یونینز اور فیڈریشنز کو دعوت دینی ہے مائن سیفٹی اینڈ ہیلتھ پر یکجا ہوکر عملی کردار ادا کریں۔
یہ اعلامیہ جنرل سیکرٹریPMWF کی طرف سے جاری کیا جاتا ہے۔

Have your say